انگور کھانے کے فوائد

مصنف: اعجاز عالم | موضوع: پھل اور صحت


انگور دنیا بھرکا و ہ معروف پھل ہے جسے پھل کے طور پر بھی کھا یا جاتا ہے اور اس کی شراب کشید کر کے اسے نشہ آور بھی بنایا جا سکتا ہے۔اس باعث شراب کا نام بھی آبِ انگور رکھا گیا ہے۔انگریزی میں اسے Grape اور فارسی میں رذا کے نام سے پکارا جاتا ہے۔اس کی بے شمار اقسام ہیں جو تقریبا ہر ملک میں موجود ہیں۔اس کی اقسام میں سرخ۔سفید۔گول دانے والا سفید۔بڑے دانے والا سیاہ اور سرخ سفید ہوتے ہیں۔ذائقے میں بھی یہ ایک دوسرے سے مختلف ہوتے ہیں۔مگر بڑے اور لمبے دانے والا انگور ذائقے میں زیادہ شیریں ہوتا ہے۔یہ کوئٹہ میں پیدا ہوتا ہے اور اس کا مزاج گرم تر ہے۔مگر وہ انگور جو کھٹ مٹھا ہو گا معتدل مزاج ہو گا۔جس قدر زیادہ شیریں انگور ہوتا ہے۔اسی قدر یہ زیادہ گرم ہوتا ہے۔انگور کے بے شمار فوائد ہیں۔

اجزاء

انگور کے اجزاء میں کھانڈ –پانی۔وٹامن بی ہے اور گرم تر محموعی طور پر ہے۔

حدِاستعما ل

ایک وقت میں دس چھٹانک سے زیادہ نہیں کھانا چاہیے۔

خاصیت و علاج

انگور جسم کو مضبوط-قوی اور موٹا کرتا ہے اور دل و دماغ کو تقویت دیتا ہے۔تازہ خون پیدا کرتا اور خون کو صاف کرتا ہے۔اس کو کھانے سے خون کے اکثر امراض ختم ہو جاتے ہیں۔انگور جو غذائیت سبھی معدوں سے زیادہ ہے اس کو کھانے سے شہوانی طاقت میں تحریک پیدا ہوتی ہے۔منقہ انگور سے بنتا ہے اور انگور ہی سے کشمش تیار کی جاتی ہے اور منقے کی خصوصیت بھی اٹل ہیں۔

یہ قبض کھول دیتا ہے اور دل و دماغ پر بوجھ ختم کر دیتا ہے۔قبض والے اصحاب رات کو نصف چھٹانک بیج نکال کر منقہ کھائیں تو انہیں صبح فراحت سے اجازت ہو جاتی ہے۔انگور کھانے سے دل کی بیماریاں دور ہو جاتی ہیں مگر یاد رہے کی انگور کھانے کی مقدار تولہ سے زیادہ نہیں ہونی چاہیے۔بچوں کے لیے انگور بے حد مفید چیز ہے۔نچہ دانت نکال رہا ہو تو اسے ایک ایک چمچہ صبح و شام دیتے رہنے سے اس کے دانت با آسانی نکل آتے ہیں۔

انگور کھانے سے بچے کا وزن بڑھتا ہے۔وہ قبض سے محفوظ رہتے ہیں اور ان کے مزاج میں چڑ چڑاپن نہیں آتا۔وہ بچے جنہیں بے ہوشی کے دورے پڑتے ہیں۔تو ان کا انگور کا رس ان میں تین چار بار دیا جائے۔بہت جلد انہیں شفا حاصل ہوتی ہے۔زیادہ منقہ یا سونف کھا لیں۔اس سے طبیعت پھر بحال ہو جائے گی۔انگور زودہضم ہے۔یہ پیشاب بند ہو تواسے کھول دیتا ہے۔اور اکثر مریضوں کو یہ بلا جھجک کھلایا جاتا ہے۔

یہ گوشت پیدا کرتا ہے اور اس کا چھلکا اتار کر اسے گودے اور اس کی صورت میں کھایا جائے تو زیادہ نفع بخش ہوتا ہے۔امراض سینہ کے لیے بے حد مفید ہے۔بدن کے بند مسام یہ کھول دیتا ہے۔کھٹے انگور کی یہ خوبی ہے کہ یہ اسہال کو ختم کر لیتا ہے اور نظامِ معدہ کو درست کرتا ہے۔

احتیاط

بلغمی مزاج والے لوگ انگور کھاتے ہوئے اختیاط برتیں۔انگور معدے میں ہوا پیدا کرتے ہیں مگر نمک اور سیاہ مرچ چھڑک کر کھانے سے معدے کو نقصان نہیں پہنچتا۔انگور مرض تلی والوں کے لئے مضر ہے۔

Share

You May Also Like